»
سه شنبه 2 آبان 1396

عالمی اردو خبر رساں ادارہ "نیوز نور" کی رپورٹ کے مطابق امیر کاروانِ اسلامی جموں وکشمیر مولانا غلام رسول حامی نے اس موقع پر سماج میں پھیلی بے راہ روی جن میں شراب و دیگر منشیات بھی شامل ہیں کو اُم الخبائث قرار دیتے ہوئے کہا کہ جموں وکشمیر کی سرزمین کو اس برائی سے پاک کر کے ہی دم لیں گے ۔انہوں نے کہا کہ ہر مذہب و مسلک کے لوگوں پر یہ فرض عائد ہوتا ہے کہ اس بیماری کا قلع قمع کرنے کیلئے متحد ہو کر میدان عمل میں کو د پڑیں ۔انہوں نے کہا کہ صرف سیمنار تک محدود رکھنا ہمارا ہدف نہیں ہے بلکہ ملت کے ہر فرد تک پہنچ کر اس بدعت کے خلاف ایک آواز بن کر کامیابی سے ہمکنار ہو کر رہیں گے۔انہوں نے مسلمانوں کے اتحاد کو اسلامی کا بنیادی فریضہ قرار دیکر کہا کہ سماج دشمن عناصر کا مقابلہ کرنا ہر فرد اُمت کا فرض ہے۔

نیوزنور 22اکتوبر2013: مجمع جہانی اہل بیت (ع) اور مجمع جہانی تقریب مذاہب اسلامی کشمیر کے نمائندے کا انٹرویو میں کہنا تھا کہ ایک طرف امام خامنہ ای اکیلے ہیں جو مسلمانوں کو یکجا اور متحد کرنے کے لئے اپنے تمام تر امکانات عالم اسلام کے سامنے رکھے ہوئے ہیں اور دوسری طرف پوری دنیا ہے، استکباری قوتیں ہیں اور مسلمانوں کی نام نہاد شخصیتیں ہیں جو مسلمانوں کے لئے باعث ننگ و عار ہیں اور ان سے اسلام کو صرف نقصان پہنچتا آ رہا ہے۔

نیوز نور 25 اکتوبر 2013: برصغیر کے متعدد چھوٹے بڑے شہروں میں عید سعید غدیر انتہائی مذہبی جوش و خروش اور تزک و احتشام کے ساتھ منائی گئی۔ ان روح پرور اجتماعات میں شیعہ سنی عوام نے شرکت کر کے حضرت امیرالمومنین علی ان ابیطالب (ع) کے تئیں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے امت مسلمہ کے اتحاد کیلئے دعائیں مانگی۔

نیوز نور01 نومبر 2013:ہندوستان زیر انتظام کشمیر کے وسطی ضلع بڈگام میں 24 ذی الحجہ کو شروع ہوئے 14 رووہ نورانی صحافت کارگاہ کے تیسرے دن علماء و دانشوروں نے مسلکی اختلافات پر چڑھائی گئی دھول کی صفائی کے غرض سے عملی اقدام کرتے ہوئے آج 26 ذی الحجہ روز شہادت خلیفہ دوم حضرت عمر رضی اللہ عنہ منانے کا اہتمام کیا۔

کشمیر میں جاری 14 روزہ نورانی صحافت ورکشاپ میں شرکاء کا بیان:

کشمیر میں 14روزہ نورانی صحافت کے چھٹے روز علماء و مفکرین کا اظہار خیال:

کشمیر میں منعقدہ میدان مباہلہ سے میدان کربلا کے تناظر میں 14 روزہ نورانی صحافت ورکشاپ کا اعلامیہ

اے کاش ایرانی مومن عوام کی طرح دیگر مسلمان بھی اسلام کی حاکمیت میں زندگی گذر بسر کرنے کا ارادہ کرتے ہوئے ولی فقیہ کے جھنڈے تلے جمع  ہو کر دنیا و آخرت کی سعادت کرنے کی پہل کرتے تاکہ دنیا بھر پر رسول رحمت صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی رحمت نمایاں ہو جاتی

  مجھے پتہ تھا کہ آنحضرت کے روضہ کی زیارت کرنے سے میں آنحضرت کا زائر کہلاوں گا لیکن کیاپتہ تھا کہ مجھے زائر کا لقب نہیں بلکہ وھابی دین کی برکت سے مشرک کا لقب ملے گا ۔میرا قلم روضہ آنحضرت کے داخلی حصے کی حالت کو منعکس کرنے سے قاصر ہے کہ  جہاں حرم مقدس میں کیا مدینہ منورہ کے گلی کوچوں میں صفائی کا قابل تحسین منظر دیکھنے کو ملتا ہے

ماہ مبارک رمضان کے آخری جمعہ  کو 1979 میں امام خمینی رضوان اللہ تعالی نے  یوم قدس کا نام دیکر مسئلہ فلسطین کو اجاگر کرنے کے لئے مخصوص کردیا جس سے فلسطینی عوام کی بھی ڈھارس بندھی اور مسئلہ فلسطین  کے بارے میں مسلمانوں کی آوازین بلند ہونے لگيں لیکن یہاں کشمیر میں  اسکا نام بدل دیا گیا ، اور یوم قدس کو یوم کشمیر کے نام پر  منانے پر زور دیا جانے لگا  ۔

1 2 3 4 5 6 7 8 
قدرت گرفته از سایت ساز سحر